Share
 
Comments
وزیر اعظم مودی نے دہرادون میں اولین اتراکھنڈ سرمایہ کار سربراہ ملاقات کا افتتاح کیا
مضمرات، پالیسی اور کارکردگی ہماری ترقی کے کلیدی وسائل ہیں : وزیر اعظم مودی
بھارت میں دیوالیہ ہونے اور دیوالیہ قرار دیے جانے سے متعلق کوڈ کے طفیل کاروبار کرنا آسان ہو گیا ہے۔ بینکنگ نظام کو بھی مستحکم بنایا گیا ہے : وزیر اعظم مودی
وزیر اعظم مودی کا کہناہے کہ سب کے لئے مکان، سب کے لئے بجلی، سب کے لئے صاف ستھرا ایندھن ، سب کے لئے صحت، سب کے لئے بینکنگ اور حکومت کی دیگر اسکیمیں ہدف تک پہنچنے میں معاون ثابت ہو رہی ہیں۔
وزیر اعظم مودی کا کہنا ہے کہ # آیوشمان بھارت درجہ دوئم اور درجہ سوئم کے شہروں میں ہسپتالوں کی تعمیر میں معاون ہوگا اور طبی بنیادی ڈھانچے کی اصلاح میں بھی تعاون دے گا۔
وزیر اعظم مودی نے سرمایہ کاروں سے کہا ہے کہ وہ میک ان انڈیا صرف بھارت کے لئے نہیں بلکہ پوری دنیا کے لئے بنائیں۔

نئی دہلی۔07اکتوبر وزیر اعظم جناب نریندر مودی نے دہرا دون میں ہدف اتراکھنڈ : سرمایہ کاروں کی چوٹی کانفرنس 2018 سے خطاب کیا۔ انھوں نے کہا کہ ہندوستان تیز رفتار تبدیلی کے دور سے گزر رہا ہے۔ انھوں نے کہا کہ یہ وسیع طور پر تسلیم کرلیا گیا ہے کہ ہندوستان آئندہ دہائیوں میں عالمی ترقی کا ایک اہم علمبردار ہوگا۔ انھوں نے کہا کہ ہندوستان میں اقتصادی اصلاحات کی رفتار اور سطح بے مثال ہے۔ اس سلسلے میں انھوں نے کہا کہ ہندوستان کی تجارت کرنے میں آسانی کی رینکنگ میں بہتری آنے کے ساتھ 42 ہوگئی ہے۔ وزیر اعظم نے ٹیکس کاری میں شروع کی گئی اصلاحات کا ذکر کیا۔ انھوں نے کہا کہ دیوالیہ اور دیوالیہ پن سے متعلق ضابطوں نے تجارت کرنے میں مزید آسانی پیدا کردی ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ جی ایس ٹی کا نفاذ آزادی کے بعد سے اب تک کی سب سے بڑی اصلاح ہے۔ انھوں نے کہا کہ اس نے ملک کو سنگل مارکیٹ میں تبدیل کردیا ہے اور ٹیکس بیس کو بڑھانے میں مدد کی ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ بنیادی ڈھانچے کے شعبہ میں تیز رفتاری سے ترقی ہو رہی ہے۔ انھوں نے سڑکوں کی تعمیر، ریلوے لائنوں کی تعمیر، نئے میٹرو نظام، تیزرفتار ٹرین منصوبہ نیز مخصوص مال بردار راہداریوں کی تیز رفتاری کے بارے میں بتایا۔ وزیر اعظم نے ہوا بازی کے شعبوں اور رہائش ، بجلی، صاف توانائی، صحت اور لوگوں کے لیے بینکنگ خدمات کے شعبے میں ہوئی پیش رفت کا ذکر کیا۔ انھوں نے کہا کہ حال ہی میں شروع کئے گئے آیوش مان بھارت منصوبہ درجہ – 2 اور درجہ – 3 کے شہروں میں طبی ڈھانچے کی ترقی کو فروغ دے گا۔

وزیر اعظم نے کہا کہ جدید ہندوستان سرمایہ کاری کے لیے ایک زبردست ہدف ہے اور ‘‘ہدف اتراکھنڈ’’ اس جذبے کی نمائندگی کرتا ہے۔ انھوں نے ریاست میں سرمایہ کاروں کو سہولت فراہم کرنے کے لیے کئے گئے اقدامات کا ذکر کیا۔ انھوں نے ہر موسم کے لیے موزوں چار دھام سڑک منصوبہ نیز رشی کیش – کرن پریاگ ریل لائن منصوبہ سمیت ریاست میں رابطے میں بہتری لانے کے لیے کئے گئے پہل کی پیش رفت کے بارے میں بھی بتایا۔ وزیر اعظم نے ہوا بازی کے شعبے میں ریاست کی زبردست صلاحیت کا ذکر کیا۔

 

 

 

وزیر اعظم نے ڈبہ بند خوراک اور قابل تجدید توانائی کے شعبوں میں اٹھائے گئے اقدامات کا ذکر کیا۔ انھوں نے میک ان انڈیا کی حصولیابیوں کا بھی ذکر کیا۔

تقریر کا مکمّل متن پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں.

20 تصاویر سیوا اور سمرپن کے 20 برسوں کو بیاں کر رہی ہیں۔
Mann KI Baat Quiz
Explore More
It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi

Popular Speeches

It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi
Business optimism in India at near 8-year high: Report

Media Coverage

Business optimism in India at near 8-year high: Report
...

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
پارلیمنٹ کے موسم سرما کے اجلاس 2021 سے پہلے میڈیا کے لئے وزیراعظم کے بیان کا متن
November 29, 2021
Share
 
Comments

نمسکار  ساتھیو!

پارلیمنٹ کا یہ اجلاس  انتہائی اہم ہے۔ ملک  آزادی کا امرت مہوتسو  منا رہا ہے۔ ہندوستان میں چارو  ں اطراف  سے اس  آزادی کے  امرت مہو تسو  کے باقاعدہ تخلیقی، تعمیری، عوام کے مفاد کے لئے، قوم  کے مفاد کے لئے، عام شہری  بہت سے پروگرام منعقد کر رہے ہیں، قدم اٹھارہے ہیں،  اور آزادی کے دیوانوں نے ، جو خواب دیکھے تھے، ان  خوابوں کو پورا کرنے کے لئے  عام شہری بھی اس ملک کی اپنی کوئی نہ کوئی ذمہ داری  نبھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ یہ خبریں اپنے آپ  میں بھارت کے  تابناک مستقبل کے لئے خوش آئند اشارے ہیں۔

کل ہم نے  دیکھا ہے کہ  گزشتہ دنوں یوم آئین بھی  نئے عزائم کے ساتھ  آئین کے جذبے کو  عملی شکل دینے کے لئے ہر کسی  کی ذمہ داری  کے سلسلے میں پورے ملک نے   ایک عزم  کیا ہے ۔ ان  سب کے تناظر میں ہم چاہیں گے، ملک بھی چاہے گا، ملک کا ہر عام شہری  چاہے گا کہ بھارت کا پارلیمنٹ کا یہ اجلاس  اور آئندہ   اجلاس بھی آزادے کے دیوانوں کے جو جذبات تھے، جو روح تھی، آزادی کے امرت مہو تسو  کی  جو روح ہے، اس روح  کے مطابق  پارلیمنٹ بھی ملک کے مفاد میں مباحثہ کرے، ملک کی ترقی کے لئے راستے  تلاش کرے، ملک کی ترقی کے لئے نئے طریقہ کار  تلاش کرے،  اور  اس کے لئے یہ اجلاس  بہت  ہی  نظریات کی افراط والا، دیر پا اثر پیدا کرنے والے مثبت فیصلے کرنے والا بنے۔ میں امید کرتا ہوں کہ مستقبل میں پارلیمنٹ کو  کیسا چلا، کتنا اچھا تعاون کیا، اس ترازو پر تولا جائے، نہ کہ کس نے کتنا زور لگا کر  پارلیمنٹ  کے اجلاس  کو روک دیا، یہ معیار نہیں ہو سکتا۔ معیار یہ  ہوگا  کہ پارلیمنٹ میں کتنے گھنٹے کام  ہوا، کتنا تعمیری  کام ہوا۔  ہم چاہتے ہیں کہ حکومت   ہر موضوع پر  مباحثہ کرنے کے لئے تیار ہے، کھلا مباحثہ کرنے کے لئے تیار ہے۔ حکومت  ہر سوال کا جواب  دینے کے لئے تیار ہے اور آزادی کے امرت مہو تسو  میں ہم یہ بھی چاہیں گے کہ پارلیمنٹ میں سوال بھی  ہو ، پارلیمنٹ میں امن بھی ہو۔

ہم چاہتے ہیں پارلیمنٹ میں حکومت کے خلاف، حکومت کی پالیسیوں کے خلاف، جتنی آواز  اٹھنی چاہئے، لیکن پارلیمنٹ  کے وقار، اسپیکر کے  وقار، صدر نشیں کے وقار ، ان سب کے ضمن میں ہم  وہ رویہ اپنائیں، جو آنے والے دنوں میں ملک کی نوجوان نسل کے کام آئے۔ پچھلے اجلاس کے  بعد  کورونا کی  شدید  صورت حال میں بھی ملک  نے 100  کروڑ سے زیادہ  ٹیکے  ، کورونا ویکسین اور اب ہم  150  کروڑ کی طرف  تیزی سے آگے بڑھ رہے ہیں۔ نئی قسم کی خبریں بھی ہمیں اور بھی چوکنا کرتی ہیں اور  بیدار کرتی ہیں۔ میں پارلیمنٹ  کے سبھی ساتھیوں  سے  بھی  چوکنا رہنے کی  درخواست کرتا ہوں۔ آپ سبھی ساتھیوں  سے بھی   چوکس رہنے کی   استدعا کرتا ہوں۔ کیونکہ آپ سب کی  عمدہ  صحت، ہم وطنوں کی عمدہ صحت، ایسی  بحران کی گھڑی میں ہماری ترجیح ہے۔

ملک کے  80  کروڑ سے زیادہ  شہریوں کو  اس کورونا دور کے بحران میں اور زیادہ تکلیف نہ ہو، اس لئے وزیراعظم غریب کلیان یوجنا  سے  اناج  مفت دینے کی  اسکیم  چل رہی ہے۔ اب اسے  مارچ  2022  تک  توسیع دے دی گئی ہے۔ قریب  دو لاکھ 60  ہزار  کروڑ روپے کی لاگت سے ، 80  کروڑ سے زیادہ  ملک کے شہریوں کو  غریب کے گھر  کا  چولہا جلتا رہے، اس کی  فکر کی گئی ہے۔ میں امید کرتا ہوں کہ اس اجلاس میں ملک کے مفاد  میں فیصلے ہم تیزی  سے کریں، مل جل کر کریں۔ عام انسان کی امید ، امنگوں کو  پورا کرنے والے بنیں۔ ایسی  میری  توقع ہے، بہت بہت شکریہ!