Share
 
Comments
Yoga has become an integral part of public life in many countries: PM Modi
The word Yoga, means 'to unite'; I hope that Yoga can become a binding force for the world: PM Modi
Traditional Indian knowledge systems, such as Yoga and Ayurveda guide us to overcome inherent weaknesses of both body and mind: PM
Yoga is not limited to exercises and postures. It involves a deep search into mind, body and spirit: PM Modi
Yoga is a deep philosophy that can help us to walk on the path of salvation or freedom from worries: PM Modi

نئی دہلی، 22/جون۔ نمسکار، نیویارک اسٹیٹ میں قدرتی طریقۂ علاج کے مرکز کے افتتاح کے لئے، تشریف لائے ہوئے معززین اور مدعوئین، ناظرین جو اس پورے عمل کو آن لائن اور ٹیلی ویژن پر ملاحظہ کررہے ہیں، خواتین و حضرات! بین الاقوامی یوم یوگ کے موقع پر مبارکباد۔

آج صبح میں سماج کے مختلف طبقوں پر مشتمل ہزارہا افراد کے ساتھ اس موقع پر دہرادون کے خوبصورت شہر میں، جو ہمالیہ کی گود میں واقع ہے، شامل ہوکر بہت مسرور ہوں۔ گزشتہ چند دنوں سے میں دنیا بھر میں تقریبات میں شریک ہونے والے افراد کی تصاویر دیکھتا رہا ہوں، دراصل صرف تین سالوں کے اندر یہ تقریب ایک عالمگیر عوامی تحریک بن گئی ہے۔ یہ متعدد ممالک میں عوامی زندگی کا مربوط حصہ بن گئی ہے۔ اس کے اثرات، اس کے منائے جانے کے دن سے بھی کہیں آگے تک جاچکے ہیں۔ میں بین الاقوامی یوم یوگ کے منائے جانے کے سلسلے میں تین موضوعات ذہن میں رکھتا ہوں، مجھے پورا یقین ہے کہ دیگر بہت سے ممالک میں بھی ایسا ہی ہوگا۔

پہلی بات یہ ہے کہ یہ لاکھوں لوگوں کے لئے ابتدا کا موقع ہے، جو یوگ کے جذبے سے سرشار ہوکر اس عمل میں لگے ہیں۔

دوسری بات یہ ہے کہ یہ ایک ایسا موقع ہے جو پہلے سے یوگا سے متعارف ہیں، وہ بھی اپنے آپ کو اس کام میں ازسرنو مشغول کررہے ہیں۔

تیسرا موضوع یہ ہے کہ یہ پوری دنیا میں پھیل گیا ہے۔ ہزاروں افراد اور ادارے جنھوں نے پہلے ہی یوگ سے استفادہ کیا ہے، ان تک رابطہ قائم کررہے ہیں، جو ابھی یوگ سے مربوط نہیں ہیں۔ اس عمل میں بین الاقوامی یوم یوگ دنیا بھر میں بہت سے ملکوں میں ایک میلے یا تہوار کے طور پر منایا جارہا ہے۔ لفظ یوگ کا مطلب ہے متحد ہونا۔ لہٰذا یوگ میں بڑھتی ہوئی یہ دلچسپی مجھے امید سے معمور کردیتی ہے۔ مجھے امید ہے کہ یوگ پوری دنیا کے لئے ایک اتحادی قوت ثابت ہوسکتی ہے۔

مجھے خوشی ہے کہ آپ نے بین الاقوامی یوم یوگ کو اس قدرتی طریقہ علاج کے مرکز کے افتتاح کے لئے منتخب کیا ہے۔ مجھے امید ہے کہ یہ مرکز یوگ کے مربوط اور ناگزیر عناصر کو اپنے تمام پروگراموں اور پہل قدمیوں میں مضبوطی کے ساتھ شامل کرنے کے لئے کام کرے گا۔

دوستو،

روایتی بھارتی علوم کا نظام مثلاً یوگ اور آیوروید ہمیں صحت مند رہنے میں معاون ہوتے ہیں۔ یہ ہمیں جسم اور ذہن دونوں کی دروں کمزوری پر قابو پانے کے لئے راستہ دکھاتے ہیں۔ یہ وہ نظام ہے جو ایک فرد کو پوری توجہ اور احترام کے ساتھ شفا بخشتے ہیں۔ یہ طریقۂ کار نہ تو زبردستی والا ہے اور نہ ہی اس میں کہیں کوئی شدت پائی جاتی ہے۔ اکثر یہ ان لوگوں کے لئے ایک خوشگوار تبدیلی ثابت ہوتا ہے جو روایتی اور فرسودہ طریقۂ علاج اپنایا کرتے تھے۔ آج کا انداز حیات جسم اور دماغ پر مضر اثرات مرتب کررہا ہے۔ روایتی طریقۂ علاج کی توجہ حفظان صحت پر اس لحاظ سے بہت بہتر نہیں رہی ہے کہ یہاں توجہ صرف شفایابی پر دی جاتی ہے، تدارک پر نہیں۔ اس بات سے انکار نہیں کیا جاسکتا کہ ہمیں آج بڑی بڑی صحتی چنوتیوں  سے نمٹنے کے لئے روایتی طریقۂ علاج درکار ہیں، تاہم یہ بات بھی صحیح ہے کہ اس سلسلے میں کچھ سقم بھی ہیں، جن پر توجہ نہیں دی جاتی ہے۔ پوری دنیا میں آج حفظان صحت کے ماہرین اس حقیقت کا اعتراف کرتے ہیں کہ یوگ اور آیوروید جیسے نظام روایتی ادویات نظام کے ساتھ پوری طرح سے تال میل بناکر کام کرسکتے ہیں۔ یہ جامع نظام کلی صحت اور امراض کے روک تھام دونوں پر توجہ مرکوز کرتے ہیں۔ ان جامع طریقہ ہائے علاج کو اپنانے سے صحت بہتر ہوتی ہے اور انفرادی اور اجتماعی دونوں سطحوں پر اس کے اچھے نتائج سامنے آتے ہیں۔ چند افراد کے نظریے کے برخلاف یوگ محض کثرت یا آسنوں تک محدود نہیں ہے، بلکہ یہ دل و دماغ اور جسم اور روح پر گہرائی سے اثرانداز ہوتا ہے۔ یہ عرفان ذات کی تفہیم فراہم کرتا ہے۔ یہ انسان کو سماجی نظم و ضبط کا پابند بناتا ہے اور اس کے بدلے میں اخلاقیات کا فروغ ہوتا ہے اور زندگی کے پائیدار حقائق اجاگر ہوتے ہیں۔ یوگ ایک عمیق فلسفہ ہے، جو ہمیں تمام طرح کے تفکرات سے نجات دے سکتا ہے۔

دوستو،

میں نے ہمیشہ یہی یقین کیا ہے کہ یوگ کا کوئی مذہب نہیں ہے، اس میں وہ عملی اقدامات شامل ہیں جو ہر کسی کو فائدہ پہنچاسکتے ہیں، یہاں تک کہ ان کو بھی جو خود کو مذہبی نہیں سمجھتے۔ جدید یوگ کے طریقے اکثر قدیم دانش مندانہ عناصر پر مبنی ہیں، ان میں اخلاقی اور روایتی اصول، آسن شامل ہیں، جو جسم کو چاق و چوبند رکھتے ہیں، روحانی فلسفہ بھی شامل ہے۔ گورو کے ذریعے ملنے والی نصیحت، منتروں کا اچارن، تنفس کے عمل کو متوازن کرنا اور ذہن کو مراقبے کے ذریعے یکسوئی کی جانب مائل کرنا بھی اس میں شامل ہے۔ یوگ ایک فرد کے انداز حیات کو بدلنے پر زور دیتا ہے، ساتھ ہی انداز حیات سے جڑی ہوئی ناقص چیزیں آسانی کے ساتھ روکی جاسکیں اور ان کا انتظام کیا جاسکے، یوگا کے ماہرین اس روزانہ کے عمل کو مفید خیال کرتے ہیں، جس کے نتیجے میں صحت بہتر ہوتی ہے، جذباتی عافیت نصیب ہوتی ہے، ذہنی افق صاف ہوتا ہے اور زندگی کا لطف آتا ہے۔ یہ یقین کہ یوگ کے کچھ آسن اور پرانایام بہت ساری بیماریوں کو روکنے میں مددگار ہیں، صدیوں سے بھارت میں رائج رہا ہے۔ اب جدید سائنس نے اس کے لئے ثبوت فراہم کرنے شروع کئے ہیں۔ سائنس نے یہ بات بھی بتائی ہے کہ یوگا کے ذریعے متعدد جسمانی اعضاء پر قابو حاصل کیا جاسکتا ہے، جن میں دل، دماغ اور ہارمون خارج کرنے والے غدود شامل ہیں۔

آج مغربی ممالک میں یوگا کے تئیں دلچسپی میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے۔ یہ کہنا مبالغہ نہ ہوگا کہ یوگ کو مغربی دنیا نے زیادہ پسند کیا ہے۔ مجھے بتایا گیا ہے کہ صرف امریکہ میں 20 ملین سے زائد افراد یوگا اپناچکے ہیں اور سالانہ 5فیصد کے لحاظ سے اس تعداد میں اضافہ بھی ہورہا ہے۔ امریکہ اور یوروپ کے متعدد جدید طبی اداروں نے یوگ کو متعدد خرابیوں اور نقائص کے لئے متبادل طریقہ علاج کے طور پر اپنالیا ہے۔ کافی دنوں سے یوگ کے شعبوں میں کافی تحقیق بھی کی گئی ہے۔ حکومت ہند نے صحت عامہ کے سلسلے میں ٹھوس بنیادوں پر روایتی نظام ہائے معالجے کے نفاذ کا عہد کررکھا ہے۔ گزشتہ برس اعلان کی گئی ہماری قومی صحتی پالیسی میں پوری مضبوطی کے ساتھ امراض کی روک تھام پر توجہ دی گئی ہے۔ ہم نے ملک گیر پیمانوں پر غیرمتعدی امراض کے تدارک اور روک تھام کے لئے پروگرام شروع کررکھے ہیں۔ بھارت ایک بڑا ملک ہے جہاں دنیا کی دوسری سب سے بڑی آبادی رہائش پذیر ہے۔ آج اٹھائے گئے اقدامات کے نتائج آنے میں کچھ وقت لگ سکتا ہے، تاہم مجھے پورا یقین ہے کہ مرئی نتائج جلد ہی واضح ہوجائیں گے۔

آخر میں، میں ایک بار پھر یہی کہنا چاہوں گا کہ آپ کا یہ قدرتی طریقہ علاج کی سہولت فراہم کرانے والا مرکز یوگ کے فوائد بھی سامنے لائے گا، ان سب کو اس کا فائدہ ہوگا جو یہاں آئیں گے اور اس طریقے سے سکون حاصل کریں گے۔ مجھے یہ کہتے ہوئے خوشی محسوس ہورہی ہے کہ آپ کے مرکز نے عافیت اور صحت کے جو راستے اپنائے ہیں ان کا مقصد انفرادی طور پر لوگوں کی تشاویش اور تفکرات کو دور کرنا ہے۔ یہ بات بھی بہت اہم ہے کہ ان کا مقصد تاحیات صحتمند رہنے کا ہے۔ میں اپنے طور پر یہ تصور کرتا ہوں کہ ان مقاصد میں سائنٹفک طریقہ کار اور اصلیت کے احترام کا جذبہ کارفرما رہے۔ اسی طریقے سے مرکز بامعنی طور پر چاق و چوبند رہنے کی مہم میں مددگار ہوسکتا ہے اور یوگ کے فوائد کو امریکہ میں بڑی تعداد میں عوام تک پہنچاسکتا ہے۔ مجھے یہ جان کر بھی مسرت ہوئی ہے کہ آپ کا یہ مرکز 500 براہ راست اور 1500 بالواسطہ روزگار بالواسطہ اس شعبے میں فراہم کرے گا، اس لئے یہ مرکز سماج کا ایک ذمے دار رکن ہوگا۔ میں اس کام کے لئے نیک تمناؤں کا اظہار کرتا ہوں۔

شکریہ، آپ کا بیحد شکریہ۔

20 تصاویر سیوا اور سمرپن کے 20 برسوں کو بیاں کر رہی ہیں۔
Explore More
It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi

Popular Speeches

It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi
India's forex kitty increases by $289 mln to $640.40 bln

Media Coverage

India's forex kitty increases by $289 mln to $640.40 bln
...

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
سوشل میڈیا کارنر،27 نومبر 2021
November 27, 2021
Share
 
Comments

India’s economic growth accelerates as forex kitty increases by $289 mln to $640.40 bln.

Modi Govt gets appreciation from the citizens for initiatives taken towards transforming India.