Share
 
Comments

عزت مآب!

سب سے پہلے تو میرا اور میرے وفد کا  بہت  ہی  گرم جوشی سے استقبال کرنے کے لئے میں آپ کو تہہ دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں۔ کچھ مہینے قبل آپ کے ساتھ ٹیلی فون پر تفصیل سے بات کرنے کا مجھے موقع ملا تھا اور بہت ہی  روح پرور اور فطری طریقے سے آپ سے جو بات چیت کرنے کا مجھے موقع ملا، وہ مجھے ہمیشہ  یاد رہے گا اور میں اس کے لئے آپ کا بے حد شکر گزار ہوں اور وہ وقت تھا جب بھارت کووڈ  کی دوسری لہر سے بہت ہی  زیادہ متاثر تھا، بڑا بحران تھا، لیکن اس وقت  جس طرح سے آپ نے  بھارت کی فکر کی  ،اسے الفاظ میں بیان نہیں کیا جاسکتا۔ آپ نے  جو  مدد کے لئے  ہاتھ بڑھایا  اور جن الفاظ  کا اظہار کیا  ، اس کے لئے میں دوبارہ تہہ دل سے آپ کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔ آپ نے ایک سچے دوست کی طرح  تعاون کا پیغام دیا تھا، اس وقت امریکہ کی  حکومت ،کمپنیاں اور بھارتی برادری  سبھی  مل کر کے بھارت کی مدد کے لئے متحد ہو گئے تھے۔

عزت مآب!

صدر بائیڈن اور آپ نے  انتہائی  چیلنجز سے پُر ماحول میں امریکہ کی قیادت سنبھالی اور اب بہت کی کم وقت  میں متعدد حصولیابیاں حاصل کی ہیں۔ کووڈ ہو، ماحولیات کی تبدیلی ہو، یا پھر کواڈ سبھی پر  امریکہ نے  بہت ہی اہم اقدامات کئے ہیں۔ دنیا کی سب سے بڑی  اور سب سے قدیم جمہوریت کے طور پر  بھارت اور امریکہ فطری شراکت دار ہیں۔ ہمارے اقدار میں مساوات  ہے ، ہمارے جیو پولیٹیکل مفادات میں مساوات  ہے اور  ہمارا تال میل اور تعاون  بھی مسلسل بڑھتا جا رہا ہے۔ سپلائی کی چین کی مضبوطی  ، جدید ترین  ٹیکنالوجی اور خلاء جیسے شعبے میں  آپ کی  خصوصی  دلچسپی ہے۔ یہ شعبے  میرے لئے بھی خصوصی ترجیح کے حامل ہیں، ان شعبوں میں ہمارے درمیان تعاون بہت ہی اہم ہے۔ آپ بھارت اور امریکہ کے مضبوط اور  ’وائبرینٹ پیپل  ٹائیز ‘سے  تو آپ اچھی طرح واقف ہیں، 4 ملین سے بھی  زیادہ نقل مکانی  کرنے والے بھارتی  ہمارے ممالک کے درمیان دوستی کے پل  ہیں۔ امریکہ  اور بھارت کی معیشت  اور معاشرے میں ان کا تعاون قابل تحسین ہے۔

عزت مآب!

نائب صدر کے طور پر آپ کا انتخاب اپنے آپ میں ایک اہم اور تاریخی  فیصلہ  ہے اور  آپ پوری  دنیا میں بہت سے لوگوں کے لئے باعث ترغیب ہیں۔ مجھے مکمل  اعتماد ہے کہ صدر بائیڈن اور آپ کی قیادت میں ہمارے تعلقات   مزید  مضبوط  ہوں گے  اور نئی بلند یاں حاصل کریں  گی۔ آپ کا  جیت کا یہ  سفر تاریخی ہے، بھارت کے لوگ بھی چاہیں  گے کہ بھارت میں آپ کی اس تاریخی فتح کے  سفر کو  خوش آمدید کریں، آپ کا   استقبال کریں، اس لئے میں خاص طور پر آپ کو  بھارت آنے کی دعوت دیتا ہوں۔ ایک بار پھر گرم جوشی سے استقبال کے لئے تہہ دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں۔

سب سے پہلے تو میرا اور میرے وفد کا  بہت  ہی  گرم جوشی سے استقبال کرنے کے لئے میں آپ کو تہہ دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں۔ کچھ مہینے قبل آپ کے ساتھ ٹیلی فون پر تفصیل سے بات کرنے کا مجھے موقع ملا تھا اور بہت ہی  روح پرور اور فطری طریقے سے آپ سے جو بات چیت کرنے کا مجھے موقع ملا، وہ مجھے ہمیشہ  یاد رہے گا اور میں اس کے لئے آپ کا بے حد شکر گزار ہوں اور وہ وقت تھا جب بھارت کووڈ  کی دوسری لہر سے بہت ہی  زیادہ متاثر تھا، بڑا بحران تھا، لیکن اس وقت  جس طرح سے آپ نے  بھارت کی فکر کی  ،اسے الفاظ میں بیان نہیں کیا جاسکتا۔ آپ نے  جو  مدد کے لئے  ہاتھ بڑھایا  اور جن الفاظ  کا اظہار کیا  ، اس کے لئے میں دوبارہ تہہ دل سے آپ کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔ آپ نے ایک سچے دوست کی طرح  تعاون کا پیغام دیا تھا، اس وقت امریکہ کی  حکومت ،کمپنیاں اور بھارتی برادری  سبھی  مل کر کے بھارت کی مدد کے لئے متحد ہو گئے تھے۔

عزت مآب!

صدر بائیڈن اور آپ نے  انتہائی  چیلنجز سے پُر ماحول میں امریکہ کی قیادت سنبھالی اور اب بہت کی کم وقت  میں متعدد حصولیابیاں حاصل کی ہیں۔ کووڈ ہو، ماحولیات کی تبدیلی ہو، یا پھر کواڈ سبھی پر  امریکہ نے  بہت ہی اہم اقدامات کئے ہیں۔ دنیا کی سب سے بڑی  اور سب سے قدیم جمہوریت کے طور پر  بھارت اور امریکہ فطری شراکت دار ہیں۔ ہمارے اقدار میں مساوات  ہے ، ہمارے جیو پولیٹیکل مفادات میں مساوات  ہے اور  ہمارا تال میل اور تعاون  بھی مسلسل بڑھتا جا رہا ہے۔ سپلائی کی چین کی مضبوطی  ، جدید ترین  ٹیکنالوجی اور خلاء جیسے شعبے میں  آپ کی  خصوصی  دلچسپی ہے۔ یہ شعبے  میرے لئے بھی خصوصی ترجیح کے حامل ہیں، ان شعبوں میں ہمارے درمیان تعاون بہت ہی اہم ہے۔ آپ بھارت اور امریکہ کے مضبوط اور  ’وائبرینٹ پیپل  ٹائیز ‘سے  تو آپ اچھی طرح واقف ہیں، 4 ملین سے بھی  زیادہ نقل مکانی  کرنے والے بھارتی  ہمارے ممالک کے درمیان دوستی کے پل  ہیں۔ امریکہ  اور بھارت کی معیشت  اور معاشرے میں ان کا تعاون قابل تحسین ہے۔

 

عزت مآب!

نائب صدر کے طور پر آپ کا انتخاب اپنے آپ میں ایک اہم اور تاریخی  فیصلہ  ہے اور  آپ پوری  دنیا میں بہت سے لوگوں کے لئے باعث ترغیب ہیں۔ مجھے مکمل  اعتماد ہے کہ صدر بائیڈن اور آپ کی قیادت میں ہمارے تعلقات   مزید  مضبوط  ہوں گے  اور نئی بلند یاں حاصل کریں  گی۔ آپ کا  جیت کا یہ  سفر تاریخی ہے، بھارت کے لوگ بھی چاہیں  گے کہ بھارت میں آپ کی اس تاریخی فتح کے  سفر کو  خوش آمدید کریں، آپ کا   استقبال کریں، اس لئے میں خاص طور پر آپ کو  بھارت آنے کی دعوت دیتا ہوں۔ ایک بار پھر گرم جوشی سے استقبال کے لئے تہہ دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں۔

20 تصاویر سیوا اور سمرپن کے 20 برسوں کو بیاں کر رہی ہیں۔
Mann KI Baat Quiz
Explore More
It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi

Popular Speeches

It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi
52.5 lakh houses delivered, over 83 lakh grounded for construction under PMAY-U: Govt

Media Coverage

52.5 lakh houses delivered, over 83 lakh grounded for construction under PMAY-U: Govt
...

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
PM condoles the passing away of renowned Telugu film lyricist Sirivennela Seetharama Sastry
November 30, 2021
Share
 
Comments

The Prime Minister, Shri Narendra Modi has expressed deep grief over the passing away of renowned Telugu film lyricist and Padma Shri awardee, Sirivennela Seetharama Sastry. 

In a tweet, the Prime Minister said;

"Saddened by the passing away of the outstanding Sirivennela Seetharama Sastry. His poetic brilliance and versatility could be seen in several of his works. He made many efforts to popularise Telugu. Condolences to his family and friends. Om Shanti."