Share
 
Comments
وزیر اعظم مودی اور افغانستان کے صدر جناب غنی نے ہمہ جہت ہند ۔ افغانستان حکمتی شراکت داری کا جائزہ لیا۔
وزیر اعظم نے ایک بار پھر یہ بات دوہرائی کہ ہندوستان افغان قیادت والے، افغان ملکیت والے اور افغان کے زیر انتظام امن اور مفاہمی عمل کی حمایت کرے گا۔

نئی دہلی،19؍ستمبر، اسلامی جمہوریہ افغانستان کے صدر ڈاکٹر محمد اشرف غنی نے 19 ستمبر 2018 کو   وزیراعظم جناب نریندر مودی   کی دعوت پر بھارت کا دورہ کیا۔

دونوں لیڈروں نے کثیر رُخی بھارت-افغان کلیدی ساجھیداری میں پیش رفت کا جائزہ لیا ۔ انہوں نے  باہمی تجارت میں اضافے پر اطمینان کا اظہار کیا جو  ایک ارب امریکی ڈالر سے تجاوز کر گئی ہے۔ دونوں لیڈروں نے  12 سے 15 ستمبر 2018  کے درمیان ممبئی میں بھارت-افغانستان تجارت وسرمایہ کاری  شو کے کامیاب انعقاد کی ستائش کی اور  چابہار بندرگاہ اور  فضائی مال بردار ی راہداری سمیت  کنکٹی ویٹی کو مستحکم کرنے کے اپنے عزم کا اعادہ کیا۔ اس کے علاوہ بنیادی ڈھانچے ، انسانی وسائل کی ترقی اور افغانستان میں دیگر  صلاحیت سازی کے پروجیکٹوں میں نئی ترقیاتی ساجھیداری میں اضافے کرنے سے بھی اتفاق کیا گیا۔

صدر غنی نے  امن اور مصالحت کے تئیں اپنی حکومت کے اقدامات کے بارے میں وزیراعظم کو مطلع کیا اور افغانستان اور اس کے عوام پر دہشت گری اور انتہا پسندی کے ذریعے عائد کئے گئے چیلنجوں کا بھی ذکر کیا۔

 وزیراعظم نے افغانستان کی قیادت والے ، افغانستان کی ملکیت والے اور افغانستان کے کنٹرول والے امن اور مصالحتی عمل کے لئے بھارت کے تعاون کا اعادہ کیا جس سے افغانستان ایک متحدہ ، پرامن ، جامع اور جمہوری ملک اور اقتصادی طور پر  ایک متحرک ملک کے طور پر ابھر سکے۔ وزیراعظم نے  اس سلسلے میں افغان حکومت کی کوششوں میں بھارت کے غیر متزلزل عہد پر زور دیا اور  افغانستان کی سکیورٹی اور  اقتدار اعلیٰ کے لئے مکمل  حمایت کا اعادہ کیا۔ انہوں نے  افغانستان میں ہوئے دہشت گردانہ حملوں کی  شدید مذمت کی جس سے بڑی تعداد میں انسانی جانیں ضائع ہوئیں اور انہوں نے  دہشت گردی کے خلاف لڑائی میں افغان کے عوام اور قومی دفاعی فورسز کے ساتھ اپنی یکجہتی کا اظہار کیا۔

مختلف بین الاقوامی فورموں میں مختلف سرگرمیوں میں دونوں ملکوں کے درمیان تال میل اور  صلاح ومشورے پر  اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے دونوں فریقوں نے  اس تعاون کو مزید مستحکم کرنے پر رضامندی ظاہر کی اور  خوشحالی ، امن ، استحکام اور ترقی کے لئے  بین الاقوامی ساجھیدارو کے ساتھ  قریبی سطح پر کام کرنے کے لئے اپنی رضامندی  کا اظہار کیا۔

'من کی بات ' کے لئے اپنے مشوروں سے نوازیں.
20 تصاویر سیوا اور سمرپن کے 20 برسوں کو بیاں کر رہی ہیں۔
Explore More
It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi

Popular Speeches

It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi
In 100-crore Vaccine Run, a Victory for CoWIN and Narendra Modi’s Digital India Dream

Media Coverage

In 100-crore Vaccine Run, a Victory for CoWIN and Narendra Modi’s Digital India Dream
...

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
PM to interact with beneficiaries and stakeholders of Aatmanirbhar Bharat Swayampurna Goa programme on 23rd October
October 22, 2021
Share
 
Comments

Prime Minister Shri Narendra Modi will interact with beneficiaries and stakeholders of Aatmanirbhar Bharat Swayampurna Goa programme on 23rd October, 2021 at 11 AM via video conferencing. The interaction will be followed by his address on the occasion.

The initiative of Swayampurna Goa, launched on 1st October 2020 was inspired by the clarion call given by the Prime Minister for ‘Atmanirbhar Bharat’. Under this programme, a state government officer is appointed as ‘Swayampurna Mitra’. The Mitra visits a designated panchayat or municipality, interacts with people, coordinates with multiple government departments and ensures that various government schemes and benefits are available to the eligible beneficiaries.

Goa Chief Minister Shri Promod Sawant will be present on the occasion.