یاترا کو 26 جنوری کے بعد تک توسیع دی جائے گی
’’یاترا کا وِکاس رتھ وِشواس رتھ میں بدل گیا ہے اور بھروسہ ہے کہ کوئی بھی پیچھے نہیں رہے گا‘‘
’’مودی ان لوگوں کی پوجا اور قدر کرتے ہیں جنہیں ہر ایک نے نظرانداز کیا‘‘
’’وی بی ایس وائی تمام تر لوگوں کو خدمات فراہم کرنے کا ایک شاندار وسیلہ ہے‘‘
’’پہلی بار کوئی حکومت مخنثوں کے معاملات پر غوروخوض کررہی ہے‘‘
’’عوام کا حکومت پر اعتمادہرجگہ نظر آتا ہے‘‘

وزیر اعظم جناب نریندر مودی نے ، وکست بھارت سنکلپ یاترا سے فائدہ حاصل کرنے والوں سے آج ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے بات چیت کی۔ ملک بھر کے ، وِکست بھارت سنکلپ یاترا سے فائدہ حاصل کرنے والے ہزاروں لوگوں نے اس تقریب میں شرکت کی۔ پروگرام میں مرکزی وزراء، ارکان پارلیمنٹ، ارکان اسمبلی اور مقامی سطح کے نمائندگان نے بھی شرکت کی۔

اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے وزیر اعظم نے وِکست بھارت سنکلپ یاتراکے دو ماہ مکمل ہونے کا ذکر کیا اور کہا ’’ یاترا  کا وِکاس رتھ، وِشواس رتھ میں بدل گیا ہے اور یہ یقین ہے کہ کوئی شخص نظر انداز نہیں کیاجائے گا۔‘‘مستفدین کا زبردست جوش و جذبہ دیکھتے ہوئے وزیر اعظم نے متعلقہ افسران کو ہدایت دی کہ وہ وی بی ایس وائی کو 26جنوری کے بعد فروری تک، توسیع دیں۔

 

 یہ یاترا 15نومبر کو بھگوان برسا منڈا کے آشیرواد کے ساتھ شروع ہوئی تھی اور یہ اب عوامی تحریک بن گئی ہے اور اس میں اب تک 15کروڑ عوام شامل ہوچکے ہیں۔اس یاترا میں ابھی تک تقریباً 80فیصد پنچایتوں کو شامل کیا جاچکا ہے۔وزیر اعظم مودی نے کہا’’ وِکست بھارت سنکلپ یاتراکا اصل مقصد اُن لوگوں تک پہنچنا ہے، جو کسی نہ کسی وجہ سے سرکاری اسکیموں سے ابھی تک محروم رہے ہیں اور مودی ایسے لوگوں کی پوجا کرتے ہیں اور قدر کرتے ہیں، جنہیں ہر ایک نے نظر انداز کیا۔

وی بی ایس وائی کو ہر شخص کو خدمات فراہم کرنے کا ایک شاندار وسیلہ بتاتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا  کہ یاترا کے دوران 4کروڑ سے زیادہ لوگوں کی صحت جانچ کی گئی  اور 2.5کروڑ لوگوں کی ٹی بی جانچ کی گئی اور 50لاکھ لوگوں کی ، سکل سیل سے ہونے والی خون کی کمی کی جانچ کی گئی۔یاترا کے دوران50لاکھ آیوشمان کارڈ، 33لاکھ نئے پی ایم –کسان مستفدین، 50 لاکھ نئے کسان کریڈٹ کارڈ، 50 لاکھ مفت گیس کنکشن فراہم کئے گئے اور 10لاکھ نئے سوندھی درخواستیں موصول ہوئیں۔وزیر اعظم نے کہا کہ یہ اعدادوشمار کسی کے لیے محض گنتی ہوسکتی ہے، لیکن ان کے لیے ہر ایک عدد ایک زندگی ہے، جو ابھی تک ان فائدوں سے محروم رہا ہے۔

 

وزیر اعظم نے کثیر جہتی غریبی کے بارے میں نئی رپورٹ کا ذکر کیا۔ وزیر اعظم مودی نے کہا کہ پچھلے 9سال میں حکومت کی کوششوں کے سبب 25کروڑ رعوام غریبی سے باہر آئے ہیں۔ انہوں نے کہا ’’پچھلے 10 سال میں جس طرح ہماری حکومت نے ایک شفاف نظام تشکیل دیا ہے، حقیقی کوششیں کی ہیں اور عوام کی شمولیت کو فروغ دیا ہے، اس کی وجہ سے ناممکن بھی ممکن ہوگیا ہے۔‘‘ انہوں نے یہ بات پی ایم –آواس یوجنا کی مثال دیتے ہوئے کہی۔ اس اسکیم میں 4کروڑ سے زیادہ غریب کنبوں کو پکے مکانات فراہم کئے گئے،جس میں سے 70فیصد مکانات خواتین کے نام پر رجسٹرڈ کئے گئے ہیں۔ اس سے نہ صرف غریبی پر قابو پایا گیا ہے، بلکہ خواتین کو بھی بااختیار بنایا گیا ہے۔اِن مکانات کے سائز میں اضافہ ہوا ہے ، عوام کی پسند کا ان مکانات کی  تعمیر میں خیال رکھا گیا ہے اور تعمیر کے عمل کی رفتار جو پہلے 300 دن تھی، اب کم ہوکر محض 100 دن رہ گئی ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا’’اس کا مطلب ہے کہ ہم مستقل مکانات پہلے سے تین گنا زیادہ رفتار سے سے تعمیر کررہے ہیں اور یہ مکانات غریبوں کو فراہم کررہے ہیں۔ اس طرح کی کوششوں نے ملک میں غریبی کو کم کرنے میں ایک بڑا کردار ادا کیا ہے۔‘‘

وزیر اعظم نے مخنثوں سے متعلق سرکاری پالیسی کی مثال دے کر ، محروم طبقے کی ترجیحات کے اپنے نظریے کی وضاحت کی ۔ انہوں نے کہا ’’یہ ہماری حکومت ہے ، جس نے پہلی بار مخنث برادری کی مشکلات پر غورو فکر کیا اور اُن کی زندگیوں کو آسان بنانے کو ترجیح دی۔سال 2019میں ہماری حکومت نے مخنثوں کے تحفظ کے لیے ایک قانون نافذ کیا، اس سے مخنثوں کو سماج میں نہ صرف ایک قابل احترام جگہ  حاصل کرنے میں مدد ملی، بلکہ اُن کے خلاف تفریق بھی ختم ہوئی۔ حکومت نے ہزاروں لوگوں کو مخنث شناختی سرٹیفکیٹ بھی جاری کئے۔‘‘

وزیر اعظم نے کہا ’’بھارت تیزی سے بدل رہا ہے ، آج  حکومت پر عوام کا اعتماد اور ایک نئے بھارت کی تعمیر کا اُن کا عزم ہر جگہ قابل دید ہے۔ ‘‘خاص طورپر کمزور قبائلی گروپوں کے ساتھ اپنی حالیہ بات چیت کا ذکر کرتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے یہاں تک کہ سب سے زیادہ پسماندہ علاقوں میں بھی قبائلی خواتین کے اقدامات کو یاد کیا اور اپنے حقوق حاصل کرنے کے لیے ان لوگوں کو جانکاری دینے کے ، ان کے عزم کو سراہا۔اپنی مدد آپ گروپ تحریک کو بااختیا ربنانے کے اقدام کے بارے میں بات کرتے ہوئے وزیر اعظم نے اِن گروپوں کو بینکوں سے جوڑنے، بلاضمانت مفت قرضوں کی حد 10 لاکھ سے بڑھا کر 20لاکھ روپے کرنےکی کوششوں کے بارے میں بات چیت کی، جس کی وجہ سے 10کروڑ نئی خواتین ، اپنی مدد آپ گروپوں سے وابستہ ہوئی ہیں۔انہوں نے نئے کاروبار کے لیے 8لاکھ کروڑ روپے سے زیادہ کی امداد حاصل کی ہے۔ انہوں نے اُن 3 کروڑ خواتین کا بھی ذکر کیا ، جنہیں خاتون کسانوں کے طورپر بااختیار بنایا گیا ہے اور 2کروڑ لکھ پتی دیدی، نیز نمو  ڈرون دیدی اسکیم کا منصوبہ تیار کیا گیا ہے۔ انہوں نے خوشی کا اظہار کیا کہ ایک ہزار سے زیادہ نمو ڈرون دیدیوں کی تربیت مکمل کی جاچکی ہیں۔

 

دیہی معیشت کو جدید بنانے اور کسانوں کو بااختیار بنانے کی حکومت کی ترجیح کے بارے میں بات کرتے ہوئے وزیر اعظم نے چھوٹے کسانوں کو مستحکم بنانے کے اقدامات کا ذکر کیا۔ انہوں نے 10ہزار ایف پی او کا ذکر کیا، جن میں سے 8ہزار پہلے ہی تشکیل پاچکی ہیں اور کھرپا بیماری کے لیے 50کروڑ ٹیکے لگائے جاچکے ہیں، جس کی وجہ سے دودھ کی پیداوار میں 50 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

بھارت کی نوجوانوں کی آبادی کا ذکر کرتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا کہ منعقد کئے گئے یاترا کوئز مقابلوں کے دوران ایتھلیٹس کی عزت افزائی کی گئی۔ انہوں نے خوشی کا اظہار کیا کہ نوجوان، رضاکاروں کے طورپر مائی بھارت پورٹل پر اندراج کرا رہے ہیں۔وزیر اعظم نے 2047 تک ایک وِکست بھارت کے قومی عزم کو دوہراتے ہوئے اپنے خطاب کا اختتام کیا۔

پس منظر

15نومبر2023 کو وِکست بھارت سنکلپ یاترا کے آغاز سے وزیر اعظم اس اسکیم کے ملک بھر کے مستفدین کے ساتھ لگاتار بات چیت کرتے رہے ہیں۔یہ بات چیت ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے پانچ مرتبہ کی گئی۔(30 نومبر، 9دسمبر، 16 دسمبر، 27 دسمبر اور 8جنوری2024)وزیر اعظم نے وِکست بھارت سنکلپ یاترا سے فائدہ حاصل  کرنے والوں کے ساتھ لگاتار دو دن راست بات چیت بھی کی(18-17دسمبر)۔ انہوں یہ بات چیت پچھلے ماہ وارانسی کے اپنے دورے میں کی۔

 

وِکست بھارت سنکلپ یاترا پورے ملک میں اِس مقصد سے کی جارہی ہے کہ اس بات کو یقینی بناکر حکومت کی اہم اسکیموں کا فائدہ تمام تر لوگوں تک پہنچایا جائے کہ اِن اسکیموں کے فوائد مقررہ وقت کے اندر اندر مقررہ لوگوں تک پہنچ جائیں۔

وِکست بھارت سنکلپ یاترا میں حصہ لینے والوں کی تعداد 15کروڑ سے زیادہ ہوگئی ہے۔یہ حقیقی سطح پر ایک گہرا اثر ڈالنے کے بارے میں یاترا کا ایک ثبوت ہے، جو وِکست بھارت کے ایک مشترکہ تصور کی جانب ملک بھر کے عوام کو متحد کررہی ہے۔

 

 

 

 

 

 

Click here to read full text speech

Explore More
لال قلعہ کی فصیل سے 77ویں یوم آزادی کے موقع پر وزیراعظم جناب نریندر مودی کے خطاب کا متن

Popular Speeches

لال قلعہ کی فصیل سے 77ویں یوم آزادی کے موقع پر وزیراعظم جناب نریندر مودی کے خطاب کا متن
A Leader for a New Era: Modi and the Resurgence of the Indian Dream

Media Coverage

A Leader for a New Era: Modi and the Resurgence of the Indian Dream
NM on the go

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
Srinagar Viksit Bharat Ambassadors Unite for 'Viksit Bharat, Viksit Kashmir'
April 20, 2024

Srinagar hosted a momentous gathering under the banner of the Viksit Bharat Ambassador or VBA 2024. Held at the prestigious Radisson Collection, the event served as a unique platform, bringing together diverse voices and perspectives to foster the nation's collective advancement towards development.

Graced by the esteemed presence of Union Minister Shri Hardeep Singh Puri as the Chief Guest, the event saw the attendance of over 400 distinguished members of society, representing influencers, industry stalwarts, environmentalists, and young minds, including first-time voters. Presidents of Chambers of Commerce, Federation of Kashmir Industrial Corporation, House Boat Owners Association, and members of the writers' association were also present.

The VBA 2024 meetup began with an interesting panel discussion on Viksit Kashmir, which focused on the symbiotic relationship between industry growth and sustainable development. This was followed by an interactive session by Minister Puri, who engaged with the attendees through an engaging presentation. Another event highlight was the live doodle capture by a local artist of the discussions.

Union Minister Hardeep Singh Puri discussed how India has changed in the last decade. He said India is on track to become one of the world's top three economies, surpassing Germany and Japan soon.

 

"The country is set to surpass Germany and Japan and will become the world's third-largest economy by 2027-28," he said.

 

According to official estimates, India's economy is projected to reach a remarkable $40 trillion by 2040. Presently, the economy stands at approximately $3.5 trillion.

He also stressed that India's progress is incomplete without a developed Kashmir.

 

"Bharat cannot be Viksit without a Viksit Kashmir," he said.

Hardeep Puri reflected on India's economic journey, noting that in the 1700s, India contributed a significant 25% to the global GDP. However, as experts documented, this figure gradually dwindled to a mere 2% by 1947.

 

He highlighted how India, once renowned as the 'sone ki chidiya' (golden bird), lost its economic strength during British colonial rule and continued to struggle even after gaining independence, remaining categorized under the 'Fragile Five' until 2014.

 

Puri emphasized that the true shift in India's economic trajectory commenced under the Modi government. Over the past decade, the nation has ascended from among the top 11 economies to ranking among the top 5 globally.

The Union Minister also encouraged everyone to participate in the Viksit Bharat 2047 mission, emphasizing that achieving this dream requires the active engagement and coordination of all "ambassadors" of change.

He highlighted India's rapid progress in metro network development, stating that the operational metro network spans approximately 950 kilometres. He expressed confidence that within the next 2-3 years, India's metro network will expand to become the second-largest globally, surpassing that of the United States.

 

Regarding Jammu and Kashmir, he mentioned that through the Smart project, over 68 projects totalling Rs 6,800 crores were conceptualized, with Rs 3,200 crores worth of projects already completed.

 

He further stated that Jammu and Kashmir possesses more potential than Switzerland but has faced setbacks due to man-made crises. He emphasized the Modi government's dedication to the comprehensive development of the region.

The minister highlighted a significant government policy shift from women-centred to women-led development. Drawing from his extensive experience as a diplomat spanning 39 years, he shared that when a country transitions to women-led development, there is typically a substantial GDP increase of 20-30%. 

He mentioned that the government is actively pursuing this objective, citing examples such as the Awas Yojana, where houses are registered in the names of women household members, and the implementation of 33% reservation for women in elected bodies as part of this broader mission. 

He also provided insight into the transformative impact of the Modi government's welfare policies on people's lives. He highlighted the Ujjwala Yojana, noting that 32 crore individuals have received LPG cylinders, a significant increase from the 14 crore connections in 2014. Additionally, he mentioned the expansion of the gas pipeline network, which has grown from 14,000 km to over 20,000 km over the past ten years.

The Vision of Viksit Bharat: 140 crore dreams, 1 purpose 

The Viksit Bharat Ambassador movement aims to encourage citizens to take responsibility for contributing to India's development. VBA meet-ups and events are being organized in various parts of the country to achieve this goal. These events provide a platform for participants to engage in constructive discussions, exchange ideas, and explore practical strategies for contributing to the movement.

Join the movement on the NaMo App: https://www.narendramodi.in/ViksitBharatAmbassador

The NaMo App: Bridging the Gap

Prime Minister Narendra Modi's app, the NaMo App, is a digital bridge that empowers citizens to participate in the Viksit Bharat Ambassador movement. The NaMo App serves as a one-stop platform for individuals to:

Join the cause: Sign up and become a Viksit Bharat Ambassador and make 10 other people

Amplify Development Stories: Access updates, news, and resources related to the movement.

Create/Join Events: Create and discover local events, meet-ups, and volunteer opportunities.

Connect/Network: Find and interact with like-minded individuals who share the vision of a developed India.

The 'VBA Event' section in the 'Onground Tasks' tab of the 'Volunteer Module' of the NaMo App allows users to stay updated with the ongoing VBA events.