Share
 
Comments

نئیدہلی،12جنوری،2021، وزیر اعظم جناب نریندر مودی نے  ملک کے نوجوانوں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ سیاست میں بے لوث ہوکر اور تعمیری انداز سے اپنا کردار ادا کریں۔ آج دوسرے نیشنل یوتھ پارلیمنٹ فیسٹیول کی  اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ سیاست بامعنی تبدیلی لانے کا ایک بڑا ذریعہ ہے اور  ہر دوسرے شعبے کی طرح نوجوانوں کی موجودگی سیاست میں بھی اہمیت رکھتی ہے۔ وزیر اعظم نے نوجوانوں کو یقین دلایا کہ آج  ایماندار لوگوں کو خدمت کرنے کا موقع مل رہا ہے، انھیں  سیاست کے پرانے طریقے کو تبدیل کرنے کا موقع مل رہا ہے جو بے اصولی سرگرمیوں سے عبارت تھی۔ آج دیانتداری اور کارکردگی وقت کی ضرورت بن گئی ہیں۔

اس سلسلے میں وزیر اعظم نے موروثی سیاست پر بڑی تفصیل کے ساتھ روشنی ڈالی۔ انھوں نے کہا کہ کرپشن لوگوں پر ایک بوجھ بن گیاہے جن کا ترکہ کرپشن تھا۔ ملک دیانتداری کو خاندانی روابط  پر ترجیح دے رہا ہے اور  امیدوار بھی یہ سمجھنے لگے ہیں کہ اہمیت صرف اچھے کام کی ہے۔

انھوں نے نوجوانوں پر زور دیا کہ وہ خاندانی نظام کو جڑ سے اکھاڑ پھینکیں۔ موروثی سیاست جمہوری نظام میں عدم صلاحیت اور آمریت کو بڑھاوا دیتی ہے کیونکہ یہ مورث پسند اپنی خاندانی سیاست کو  اور سیاست میں خاندان کو محفوظ رکھنے کے لیے کام کرتے ہیں۔ وزیر اعظم نے کہا ’’آج  خاندانی نام کی بیساکھی کے ذریعے انتخاب جیتنے کا سلسلہ ختم ہوگیا ہے لیکن خاندانی سیاست کا بگاڑ ابھی ختم نہیں ہوا ہے۔ خاندانی سیاست سے قوم کو پہلے رکھنے کی بجائے اپنے آپ کو اور خاندان کو  آگے رکھا جاتا ہے۔ یہ بھارت میں سماجی کرپشن کی ایک بڑی وجہ ہے‘‘۔

وزیر اعظم نے  نوجوانوں پر زور دیاکہ  وہ سیاست میں آئیں کیونکہ ان کے سیاست میں داخلے سے خاندانی سیاست کا سلسلہ یقینی طور پر ختم ہوجائے گا۔ جناب مودی نے کہا ’’ہماری جمہوریت کو محفوظ رکھنے کے لیے یہ ضروری ہے کہ آپ سیاست میں شامل ہوں۔ آپ کے سامنے سوامی وویکانند کی صورت میں ایک عظیم رہنما موجود ہے۔ اوراگر  ان کے فیضان سے  ہمارے نوجوان سیاست میں شامل ہوں گے تو ملک مضبوط ہوگا‘‘۔

'من کی بات ' کے لئے اپنے مشوروں سے نوازیں.
Modi Govt's #7YearsOfSeva
Explore More
It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi

Popular Speeches

It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi
Agri, processed food exports buck Covid trend, rise 22% in April-August

Media Coverage

Agri, processed food exports buck Covid trend, rise 22% in April-August
...

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
وزیراعظم کاامریکہ کے دورہ پر روانہ ہونے سے قبل بیان
September 22, 2021
Share
 
Comments

میں ریاست ہائے متحدہ امریکہ   یو ایس اے کے صد ر عزت مآب جوبائیڈن کی دعوت پر 22 تا 25 ستمبر 2021 امریکہ کا دورہ کروں گا۔

اپنے دورہ کے دوران میں صدربائیڈن کے ساتھ بھارت- امریکہ جامع عالمی اسٹراٹیجک ساجھیداری کا جائزہ لوں گا اور باہمی مفاد کے علاقائی اور عالمی امور پر تبادلہ  خیال کروں گا۔ میں دونوں ملکوں کے درمیان خاص طور پر سائنس اور ٹکنولوجی کے شعبے میں اشتراک کے لئے امکانات تلاش کرنے کی غرض سے نائب صدر کملا ہیرس کے ساتھ ملاقات کرنے کا بھی منتظر ہوں۔

میں ، صدر جوبائیڈن، آسٹریلیا کے وزیراعظم  اسکاٹ موریسن اور جاپان کے وزیراعظم یوشی ہیدے سوگا کے ہمراہ کوویڈ لیڈران کی اوّلین بنفس نفیس سربراہ کانفرنس میں شرکت کروں گا۔ اس سربراہ کانفرنس سے اس سال مارچ میں منعقدہ ورچول سربراہ کانفرنس کے نتائج کا جائزہ لینے اور بھارت۔ بحرالکاہل خطے کے لئے ہمارے مشترکہ ویژن پر مبنی مستقبل کے رابطوں کے لئے ترجیحات کی نشاندہی کرنے کا موقع فراہم ہوگا۔

میں آسٹریلیا کے وزیراعظم اسکاٹ موریسن اور جاپان کے وزیراعظم سوگا کے ساتھ بھی ملاقات کروں گا جس کے دوران ان کے متعلقہ ممالک کے ساتھ مستحکم دوطرفہ تعلقات اور علاقائی اور عالمی  امور پر ہمارے مفید تبادلوں کو جاری رکھنے کا جائزہ لیا جائے گا۔

میں اقوام متحدہ جنرل اسمبلی  سے خطاب کے ساتھ اپنے دورے کا اختتام کروں گا۔ اس خطاب میں کووڈ-19 عالمی وباد سمیت فوری کارروائی کا تقاضہ کرنے وا لی چنوتیوں، انسداد دہشت گردی کی ضرورت، آب و ہوا کی تبدیلی اور دیگر اہم امور پر توجہ مرکوز کی جائے گی۔

 امریکہ کے میرے اس دورہ کی بدولت امریکہ کے ساتھ جامع عالمی اسٹراٹیجک ساجھیداری کو مستحکم کرنے، ہمارے اسٹراٹیجک ساجھیداروں- جاپان اور آسٹریلیا کے ساتھ تعلقات کو تقویت بہم پہنچانے اور اہم عا لمی امور پر ہمارے تال میل اور اشتراک کو آگے لے جانے کا ایک موقع فراہم ہوگا۔.