Share
 
Comments

نمبر شمار

دستاویزات

بھارت کی طرف سے

ویتنام کی طرف سے

1.

امن ، خوشحالی اور عوام کے لئے بھارت – ویتنام مشترکہ مشن

بھارت – ویتنام جامع کلیدی ساجھیداری  کے مستقبل  کے فروغ  کی رہنمائی کے لئے ، قدیم ، تاریخی اور  ثقافتی رشتوں کی بنیاد پر  مشترکہ مفادات اور اقدار اور باہمی کلیدی اعتماد اور دونوں ملکوں کے درمیان مفاہمت پر تعمیر ۔

وزرائے اعظم کے ذریعہ منظور کردہ

2.

جامع کلیدی ساجھیداری کے مزید نفاذ کے لئے 2023-2021 ء کی مدت کے لئے  ایکشن پلان
امن ، خوشحالی اور عوام کے لئے مشترکہ ویژن  کے نفاذ  کو  2023-2021 ء کے دوران دونوں فریقوں کے ذریعے  ٹھوس کارروائی سے نافذ کرنے کی تجویز ۔

وزیر خارجہ ڈاکٹر ایس جے شنکر

امورِ خارجہ کے وزیر  اور  نائب وزیر اعظم جناب پھام بھِن مِن

3.

بھارت کی وزارتِ دفاع کے دفاعی پیداوار  کے محکمے اور  ویتنام کی قومی دفاع  کی وزارت کے  دفاعی صنعت کے جنرل محکمے کے درمیان  دفاعی صنعت  میں تعاون کے بندوبست کا نفاذ ۔

دونوں ملکوں کی دفاعی صنعتوں کے درمیان تعاون کو فروغ دینے کے لئے ایک فریم ورک فراہم کرنا ۔

جوائنٹ سکریٹری ( بحریہ نظام ) جناب سریندر پرساد یادو

وائس چیئر مین  میجر جنرل لونگ  تھَن چھونگ

4.

ویتنام کے نہا ترنگ میں  نیشنل ٹیلی کمیونکیشن یونیورسٹی میں   آرمی سافٹ ویئر پارک  کے لئے بھارت کی  5 ملین امریکی ڈالر کی امداد کے لئے ہنوئی میں بھارتی سفارت خانےکے ساتھ معاہدہ ۔

سافٹ ویئر ایپلی کیشن کے شعبے میں تربیت اور سروسز کی فراہمی کے ساتھ نہا ترنگ میں ٹیلی کمیونکیشن یونیورسٹی میں آرمی سافٹ ویئر پارک کے آئی ٹی بنیادی ڈھانچے کے قیام میں سہولت ۔

ویتنام میں  بھارت کے سفیر جناب پرانے ورما

ریکٹر کرنل لی شوان ہُنگ

5.

اقوامِ متحدہ  میں قیامِ امن  کے لئے   بھارت اور ویتنام کے  قیامِ امن کارروائیوں کے محکمے  کے درمیان تعاون کے لئے  اقوامِ متحدہ کے  سینٹر برائے قیامِ امن  میں بندوبست  کا نفاذ ۔

اقوامِ متحدہ قیامِ امن کے شعبے میں تعاون کو فروغ دینے کے لئے خصوصی  سرگرمیوں کی نشاندہی کرنا ۔

ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل ( آئی سی ) میجر جنرل انل کمار کشید

ڈائریکٹر میجر جنرل  ہوانگ کِم  پھُنگ

6.

بھارت کے  ایٹمی توانائی  ریگو لیٹری بورڈ  ( اے ای آر بی ) اور ویتنام کی  ریڈئیشن اور نیو کلیئر سیفٹی  کی ایجنسی ( وی اے آر اے این ایس ) کے درمیان مفاہمت نامہ

تابکاری سے تحفظ اور نیو کلیائی حفاظت کے شعبوں میں دونوں ملکوں کے ریگولیٹری اداروں کے درمیان باہمی تعاون کو فروغ دینا ۔

چیئرمین جناب جی ناگیشور راؤ

ڈائریکٹر جنرل پروفیسر اینگوئین   توان کھائی

7.

سی ایس آئی آر – انڈین انسٹی ٹیوٹ آف پیٹرولیم  اور ویتنام پیٹرولیم انسٹی ٹیوٹ کے درمیان مفاہمت نامہ ۔

پیٹرولیم سے متعلق  تحقیق اور تربیت میں تعاون کو فروغ دینا ۔

ڈائریکٹر  ڈاکٹر انجان رے

ڈائریکٹر جناب اینگوئین آنہ دیو

8.

ٹاٹا میموریل  سینٹر آف انڈیا اور  ویتنام نیشنل  کینسر ہاسپٹل کے درمیان  مفاہمت نامہ ۔

کینسر کے مریضوں کے لئے تربیت   ، سائنسی تحقیق ، حفظانِ صحت کی خدمات   ، تشخیص اور علاج کے شعبوں میں  تبادلوں کو فروغ دینا ۔

ڈائریکٹر ڈاکٹر راجندر  اے بدوے

ڈائریکٹر جناب لی وان کوانگ

9.

نیشنل سولر فیڈریشن آف انڈیا  اور ویتنام کلین اینرجی ایسوسی ایشن کے درمیان مفاہمت نامہ ۔

بھارت اور ویتنام کی شمسی توانائی کی صنعتوں کے درمیان بہترین طریقۂ کار ، معلومات اور علم کے تبادلے کو فروغ دینا اور بھارت اور ویتنام میں شمسی بجلی کو فروغ دینے کے لئے نئے کاروباری مواقع تلاش کرنا ۔

چیئرمین جناب پرنو آر مہتا

صدر جناب داؤ دُو دونگ

 

اعلانات :

  1. حکومتِ ہند کی طرف سے ویتنام کو دی گئی 100 ملین امریکی ڈالر کی  دفاعی لائن  آف کریڈٹ  کے تحت  ویتنام  سرحدی گارڈ  کمان  کے لئےتیز رفتار گارڈ کشتی ( ایچ  ایس جی بی ) مینو فیکچرنگ پروجیکٹ  کا نفاذ : ویتنام کو ایک مکمل  ایچ ایس جی بی سونپا گیا ۔   بھارت میں  دو ایچ ایس جی بی   کی تیاری شروع کی گئی  اور ویتنام میں 7 ایچ ایس جی بی تیار کرنے  کی بنیاد ڈالی گئی ۔
  2. ویتنام کے  نِنہ تھوان صوبے میں  مقامی برادری کے فائدے کے لئے  بھارت کی طرف سے  1.5 ملین امریکی ڈالر  کی امداد سے  سات ترقیاتی پروجیکٹوں  کی تکمیل اور ان کو سونپا جانا ۔
  3. سال 2022-2021 ء سے سالانہ  کیوئک امپیکٹ   پروجیکٹ ( کیو آئی پی ) کو موجودہ پانچ سے بڑھا کر دس کرنا ۔
  4. ویتنام میں  وراثتی تحفظ کے لئے  تین نئے ترقیاتی ساجھیداری  پروجیکٹ ( مائی سَن میں مندر کا ایف بلاک ؛ کیوانگ  نام صوبے میں  ڈونگ ڈوانگ بودھ مونیسٹری  اور  پھو یین صوبے میں  نہان چام   ٹاور ) ۔
  5. بھارت – ویتنام  تہذیب اور ثقافتی تعلقات پر   ایک اینسائکلو پیڈیا تیار کرنے کے لئے   باہمی پروجیکٹ کا آغاز ۔

 

'من کی بات ' کے لئے اپنے مشوروں سے نوازیں.
Modi Govt's #7YearsOfSeva
Explore More
It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi

Popular Speeches

It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi
With 2.5 crore jabs on PM’s birthday, India sets new record for Covid-19 vaccines

Media Coverage

With 2.5 crore jabs on PM’s birthday, India sets new record for Covid-19 vaccines
...

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
وزیراعظم نے اپنے یوم پیدائش پر صدر جمہوریہ، نائب صدر جمہوریہ اور دیگر عالمی رہنماؤں کا نیک خواہشات پیش کرنے پر شکریہ ادا کیا
September 17, 2021
Share
 
Comments

نئی دہلی،17 ستمبر ،2021   /  وزیراعظم نے اپنے یوم پیدائش پر صدر جمہوریہ، نائب صدر جمہوریہ اور دیگر عالمی رہنماؤں  کا نیک خواہشات پیش کرنے پر شکریہ ادا کیا۔

صدر جمہوریہ سے ایک جواب میں  وزیراعظم نے کہا  ‘‘عزت مآب صدر جمہوریہ ، آپ کے اس بیش بہا نیک خواہشات کے پیغام کے لیے تہہ دل سے شکریہ۔’’

نائب صدر جمہوریہ سے ایک جواب میں  وزیراعظم نے کہا ‘‘مدبرانہ خواہشات کے لیے  نائب صدر جمہوریہ  آپ کا شکریہ’’۔

سری لنکا کے صدر سے ایک جواب میں وزیراعظم نے کہا ‘‘نیک خواہشات کے لیے صدر موصوف آپ کا شکریہ’’۔

"Thank you Vice President @MVenkaiahNaidu Garu for the thoughtful wishes."

نیپال کے وزیر اعظم  سے ایک جواب میں وزیراعظم نے کہا ‘‘آپ کی ہمدردانہ مبارکباد پر وزیراعظم میں شکریہ ادا کرنا چاہوں گا۔’’

"Thank you President @GotabayaR for the wishes."

سری لنکا کے وزیراعظم سے ایک جواب میں وزیراعظم نے کہا  ‘‘نیک خواہشات کے لیے میرے دوست وزیراعظم راج پکسا آپ کا شکریہ ۔’’

"I would like to thank you for your kind greetings, PM @SherBDeuba."

ڈومنیکا کے وزیر اعظم سے ایک جواب میں وزیراعظم نے کہا ‘‘آپ کی پیاری خواہشات کے لیے وزیراعظم آپ کا شکرگزار ہوں۔’’

"Thank you my friend, PM Rajapaksa, for the wishes."

نیپال کے سابق وزیراعظم سے ایک جواب میں وزیراعظم نے کہا ‘‘آپ کا شکریہ ، جناب کے پی شرما اولی۔’’

"Grateful to you for the lovely wishes, PM @SkerritR."

نیپال کے سابق وزیراعظم سے ایک جواب میں وزیراعظم نے کہا ‘‘آپ کا شکریہ ، جناب کے پی شرما اولی۔’’

"Thank you, Shri @kpsharmaoli."