وزیر اعظم بھارت 6 جی وژن دستاویز کی نقاب کشائی کریں گے اور 6 جی آر اینڈ ڈی ٹیسٹ بیڈ کا افتتاح کریں گے
یہ ملک میں اختراعات، صلاحیت سازی اور ٹیکنالوجی کو تیزی سے اپنانے کا ماحول فراہم کریں گے
وزیر اعظم ’کال بیفور یو ڈِگ‘ ایپ بھی لانچ کریں گے
یہ ایپ پی ایم گتی شکتی کے تحت ’پوری حکومت کے نقطہ نظر‘ کی نشاندہی کرتا ہے
یہ ممکنہ کاروباری نقصان کو بچائے گا اور ضروری خدمات میں کم خلل کی وجہ سے شہریوں کو ہونے والی تکلیف کو کم کرے گا

وزیر اعظم جناب نریندر مودی 22 مارچ، 2023 کو دوپہر 12:30 بجے وگیان بھون میں ایک پروگرام کے دوران ہندوستان میں نئے بین الاقوامی ٹیلی کمیونی کیشن یونین (آئی ٹی یو) ایریا آفس اور انوویشن سنٹر کا افتتاح کریں گے۔ پروگرام کے دوران، وزیر اعظم بھارت 6 جی وژن دستاویز کی نقاب کشائی کریں گے اور 6 جی آر اینڈ ڈی ٹیسٹ بیڈ کا افتتاح  کریں گے۔ وہ ’کال بیفور یو ڈِگ‘ ایپ بھی لانچ کریں گے۔ اس موقع پر وزیراعظم مجمع سے خطاب بھی کریں گے۔

آئی ٹی یو اقوام متحدہ کی انفارمیشن اور  کمیونی کیشن ٹیکنالوجیز آئی سی ٹی) کے لیے خصوصی ایجنسی ہے۔ اس کا ہیڈکوارٹر جنیوا میں ہے، اور فیلڈ آفس، علاقائی دفاتر اور ایریا آفس  کا ایک نیٹ ورک ہے۔ ہندوستان نے ایریا آفس کے قیام کے لیے آئی ٹی یو کے ساتھ مارچ 2022 میں میزبان ملک کے معاہدے پر دستخط کیے تھے۔ ہندوستان کے ایریا آفس نے ایک انوویشن سنٹر قائم کرنے کا بھی  تصور کیا، جو اسے آئی ٹی یو کے دیگر ایریا دفاتر میں منفرد بناتا ہے۔ ایریا آفس، جس کی فنڈنگ مکمل طور پر ہندوستان کے ذریعے کی جاتی ہے، نئی دہلی کے مہرولی میں سنٹر فار ڈیولپمنٹ آف ٹیلی میٹکس (سی-ڈاٹ) کی عمارت کی دوسری منزل پر واقع ہے۔ یہ ہندوستان، نیپال، بھوٹان، بنگلہ دیش، سری لنکا، مالدیپ، افغانستان اور ایران کو اپنی خدمات فراہم کرے گا، اور اقوام کے درمیان ہم آہنگی کو بڑھانے اور خطے میں باہمی طور پر فائدہ مند اقتصادی تعاون کو فروغ دے گا۔

بھارت 6 جی وژن دستاویز کو 6 جی کے ٹیکنالوجی انوویشن گروپ (ٹی آئی جی-6جی) نے تیار کیا ہے، جسے نومبر 2021 میں مختلف وزارتوں/محکموں، تحقیق و ترقی کے اداروں، ماہرین تعلیم، معیار طے کرنے والے اداروں، ٹیلی کام سروس فراہم کرنے والوں اور صنعت کے اراکین کے ساتھ تشکیل دیا گیا تھا تاکہ ہندوستان میں 6 جی کے لیے روڈ میپ اور ایکشن پلان تیار کیا جا سکے۔ 6 جی ٹیسٹ بیڈ تعلیمی اداروں، صنعت، اسٹارٹ اپس، ایم ایس ایم ای، صنعت وغیرہ کو ترقی پذیر آئی سی ٹی ٹیکنالوجیز کو جانچنے اور ان کی توثیق کرنے کا ایک پلیٹ فارم فراہم کرے گا۔ بھارت 6 جی وژن دستاویز اور 6 جی ٹیسٹ بیڈ ملک میں اختراعات، صلاحیت سازی اور ٹیکنالوجی کو تیزی سے اپنانے کے لیے ایک سازگار ماحول فراہم کرے گا۔

مربوط منصوبہ بندی اور پی ایم گتی شکتی کے تحت انفراسٹرکچر کنیکٹویٹی پروجیکٹوں کے مربوط نفاذ کے وزیر اعظم کے وژن کو پورا کرتے  ہوئے، ’کال بیفور یو ڈِگ‘ (سی بڈ) ایپ ایک ایسا ٹول ہے جس کا تصور آپٹیکل فائبر کیبل جیسے بنیادی اثاثوں کو پہنچنے والے نقصان کو روکنے کے لیے کیا گیا ہے، جو کہ غیر مربوط کھدائی کی وجہ سے ہوتا ہے، اور کھدائی سے ملک کو ہر سال تقریباً 3000 کروڑ روپے کا نقصان ہوتا ہے۔ موبائل ایپ سی بڈ کھدائی کرنے والوں اور اثاثہ جات کے مالکان کو ایس ایم ایس/ای میل نوٹیفکیشن اور کال کرنے کے لیے کلک کے ذریعے جوڑ ے گا، تاکہ زیر زمین اثاثوں کی حفاظت کو یقینی بناتے ہوئے ملک میں منصوبہ بند کھدائی ہو سکے۔

سی بڈ، جو ملک کی حکمرانی میں ’پوری حکومت کے نقطہ نظر‘ کو اپنانے کا خاکہ پیش کرتا ہے، کاروبار کرنے میں آسانی کو بہتر بنا کر تمام متعلقین کو فائدہ پہنچائے گا۔ یہ ممکنہ کاروباری نقصان کو بچائے گا اور سڑک، ٹیلی کام، پانی، گیس اور بجلی جیسی ضروری خدمات میں کم خلل کی وجہ سے شہریوں کو ہونے والی تکلیف کو کم کرے گا۔

اس پروگرام میں آئی ٹی یو کے مختلف ایریا دفاتر کے آئی ٹی/ٹیلی کام وزراء، آئی ٹی یو کے سیکرٹری جنرل اور دیگر سینئر حکام، ہندوستان میں اقوام متحدہ کے سربراہان/ دیگر بین الاقوامی اداروں کے سربراہان، سفیروں، صنعت کے رہنما، اسٹارٹ اپ اور ایم ایس ایم ای، ماہرین تعلیم ، طلباء اور دیگر متعلقین شرکت کریں گے۔

 

Explore More
لال قلعہ کی فصیل سے 77ویں یوم آزادی کے موقع پر وزیراعظم جناب نریندر مودی کے خطاب کا متن

Popular Speeches

لال قلعہ کی فصیل سے 77ویں یوم آزادی کے موقع پر وزیراعظم جناب نریندر مودی کے خطاب کا متن
UPI payment: How NRIs would benefit from global expansion of this Made-in-India system

Media Coverage

UPI payment: How NRIs would benefit from global expansion of this Made-in-India system
NM on the go

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
Cabinet approves Proposal for Implementation of Umbrella Scheme on “Safety of Women”
February 21, 2024

The Union Cabinet chaired by Prime Minister Shri Narendra Modi approved the proposal of Ministry of Home Affairs of continuation of implementation of Umbrella Scheme on ‘Safety of Women’ at a total cost of Rs.1179.72 crore during the period from 2021-22 to 2025-26.

Out of the total project outlay of Rs.1179.72 crore, a total of Rs.885.49 crore will be provided by MHA from its own budget and Rs.294.23 crore will be funded from Nirbhaya Fund.

Safety of Women in a country is an outcome of several factors like stringent deterrence through strict laws, effective delivery of justice, redressal of complaints in a timely manner and easily accessible institutional support structures to the victims. Stringent deterrence in matters related to offences against women was provided through amendments in the Indian Penal Code, Criminal Procedure Code and the Indian Evidence Act.

In its efforts towards Women Safety, Government of India in collaboration with States and Union Territories has launched several projects. The objectives of these projects include strengthening mechanisms in States/Union Territories for ensuring timely intervention and investigation in case of crime against women and higher efficiency in investigation and crime prevention in such matters.

The Government of India has proposed to continue the following projects under the Umbrella Scheme for “Safety of Women”:

  1. 112 Emergency Response Support System (ERSS) 2.0;
  2. Upgradation of Central Forensic Sciences laboratories, including setting up of National Forensic Data Centre;
  3. Strengthening of DNA Analysis, Cyber Forensic capacities in State Forensic Science Laboratories (FSLs);
  4. Cyber Crime Prevention against Women and Children;
  5. Capacity building and training of investigators and prosecutors in handling sexual assault cases against women and children; and
  6. Women Help Desk & Anti-human Trafficking Units.