نئی دہلی،04؍نومبر،وزیراعظم جناب نریندر مودی نے 3؍نومبر 2019 کو آسیان-انڈیا سربراہ کانفرنس کے موقع پر میانمار کی اسٹیٹ کونسلر آنگ سان سوچی سے ملاقات کی۔ ستمبر ؍2017 میں  میانمار کے اپنے گزشتہ دورے اور جنوری 2018 میں آسیان-انڈیا یادگار سربراہ کانفرنس کے دوران اسٹیٹ کونسلر کے ہندوستان کے دورے کو یاد کرتے ہوئے دونوں لیڈروں نےدونوں ملکوں کے درمیان اہم    پارٹنرشپ کی ترقی پر اطمینان کا اظہار کیا۔

وزیراعظم نے  ہندوستان کی لُک ایسٹ پالیسی اور پڑوسی ملکوں کو ترجیح دینے کی پالیسیوں     کے پیش نظر اُس ترجیح پر زور دیا، جو ہندوستان ایک پارٹنر کے طور پر میانمار کو دیتا ہے۔ اس مقصد کے لئے  انہوں نے سڑکوں، بندرگاہوں اور دیگر بنیادی ڈھانچے کی تعمیر کے ذریعہ   میانمار  تک اور اس کے ذریعہ   جنوب-مشرقی  ایشیاء تک مادی کنکٹی ویٹی کو بہتر بنانے کےلئے ہندوستان کی عہدبندی پرزور دیا۔ ہندوستان ، میانمار کی پولیس، فوج اور سول سروینٹس کے ساتھ ساتھ اس کے طلبہ اور شہریوں کےلئے  صلاحیت کی توسیع کی مضبوطی کے ساتھ حمایت بھی جاری رکھے گا۔ دونوں لیڈروں نے اس بات پر اتفاق کیا کہ عوام سے عوام کے رابطوں سے پارٹنرشپ کی بنیاد کی توسیع میں مدد ملے گی اور    اس لئے انہوں نےدونوں ملکوں کے درمیان فضائی کنکٹی ویٹی کی توسیع  اور  نومبر 2019 کے آخر میں ینگون میں سی ایل ایم وی ممالک (کمبوڈیا، لاؤس ، میانمار اور ویتنام) کےلئے  ایک کاروباری تقریب کی میزبانی کرنے کے حکومت ہند کے منصوبوں سمیت میانمار میں ہندوستان کے بڑھتے ہوئے کاروباری مفاد کا خیر مقدم کیا۔

اسٹیٹ کونسلر آنگ سان سوچی نے اس بات کی تصدیق کی کہ ان کی حکومت ہندوستان کے ساتھ شراکت داری کو اہمیت دیتی ہے اور انہوں نے میانمار میں جمہوریت کی توسیع اور ترقی کی گہرائی کے لئے ہندوستان کی مسلسل حمایت کی ستائش کی۔

دونوں ملکوں نے اس بات پر اتفاق کیا کہ ہماری شراکت داری کی وسعت کو جاری رکھنے کے لئے مستحکم اور پُرامن سرحد کی بہت اہمیت ہے۔ وزیراعظم نے کہا کہ ہندوستان -میانمار کی سرحد کے پار کارروائی کرنےکےلئے شورش برپاکرنے والےکسی گروپ کو  جگہ نہ دیئےجانے کو یقینی بنانے  کےلئے ہندوستان میانمارکےتعاون کو بہت اہمیت دیتاہے۔

250پری فیبریکیٹیڈ مکانات تیار کرنے ، جو کہ اس سال جولائی ماہ میں میانمارحکومت کے سپرد کئے گئے تھے، کے پہلے ہندوستانی پروجیکٹ کے مکمل ہونے پر رکھائن کی صورتحال کے سلسلے میں وزیراعظم نے اس ریاست میں مزید سماجی، اقتصادی پروجیکٹوں پر کام کرنے کے لئے ہندوستان کی آمادگی کا اظہار کیا۔ وزیراعظم نے اس بات پر زور دیا کہ اپنے گھروں سے اُجڑ کر بنگلہ دیش میں قیام پذیر لوگوں کی  رکھائن ریاست میں تیزرفتار محفوظ اور پائیدار طریقے سے اپنے   گھروں کو واپسی  نہ صرف خطے کے مفاد میں ہے بلکہ بے گھر افراد اور تینوں پڑوسی ملکوں، ہندوستان، بنگلہ دیش اور میانمار کے بھی مفاد میں ہے۔

دونوں لیڈروں نے دونوں ممالک کے بنیادی مفاد کے شعبوں میں تعاون کے تمام معاملوں میں مستحکم تعلقات کا اعتراف کرتے ہوئے آنے والے سال میں اعلیٰ سطحی بات چیت کی رفتار کو برقرار رکھنے پر اتفاق کیا۔

Explore More
لال قلعہ کی فصیل سے 77ویں یوم آزادی کے موقع پر وزیراعظم جناب نریندر مودی کے خطاب کا متن

Popular Speeches

لال قلعہ کی فصیل سے 77ویں یوم آزادی کے موقع پر وزیراعظم جناب نریندر مودی کے خطاب کا متن
Unstoppable bull run! Sensex, Nifty hit fresh lifetime highs on strong global market cues

Media Coverage

Unstoppable bull run! Sensex, Nifty hit fresh lifetime highs on strong global market cues
NM on the go

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
Unimaginable, unparalleled, unprecedented, says PM Modi as he holds a dynamic roadshow in Kolkata, West Bengal
May 28, 2024

Prime Minister Narendra Modi held a dynamic roadshow amid a record turnout by the people of Bengal who were showering immense love and affection on him.

"The fervour in Kolkata is unimaginable. The enthusiasm of Kolkata is unparalleled. And, the support for @BJP4Bengal across Kolkata and West Bengal is unprecedented," the PM shared in a post on social media platform 'X'.

The massive roadshow in Kolkata exemplifies West Bengal's admiration for PM Modi and the support for BJP implying 'Fir ek Baar Modi Sarkar.'

Ahead of the roadshow, PM Modi prayed at the Sri Sri Sarada Mayer Bari in Baghbazar. It is the place where Holy Mother Sarada Devi stayed for a few years.

He then proceeded to pay his respects at the statue of Netaji Subhas Chandra Bose.

Concluding the roadshow, the PM paid floral tribute at the statue of Swami Vivekananda at the Vivekananda Museum, Ramakrishna Mission. It is the ancestral house of Swami Vivekananda.