Share
 
Comments
7 دسمبر کو تلنگانا کے انتخابات عوا م کے لئے ایک موقع فراہم کریں گے جب وہ ذات اور کنبہ پروری پر مبنی سیاست کی بنیاد پر روا رکھی جانے والی تفریق کو رد کر سکتے ہیں: وزیر اعظم مودی
ٹی آر ایس اور کانگریس ایک ہی سکے کے دو پہلو ہیں۔ وہ در اصل اے اور بی ٹیمیں ہیں : وزیر اعظم حیدر آباد میں
ہم تلنگانا کو سب کا ساتھ سب کا وکاس کے اصول کی رہنمائی میں نئی بلندیوں تک لے جانے کے لئے پابند عہد ہیں: وزیر اعظم مودی حیدرآباد میں

وزیر اعظم نریندر مودی نے آج حیدر آباد، تلنگانا میں ایک وسیع عوامی جلسے سے خطاب کیا، جہاں انہوں نے تلنگانا میں ٹی ڈی پی اور کانگریس سمیت مختلف النوع سیاسی پارٹیوں کی کنبہ پروری پر مبنی سیاست کو زبردست نشانہ تنقید بنایا۔ انہوں نے تلنگانا کے عوام سے کہا کہ وہ ازخود اس بات کو محسو س کریں کہ بی جے پی تلنگانا کی واحد پارٹی ہے جو چھوٹے قسم کی کنبہ پروری کی سیاست کی بجائے جمہوری اصولوں کے مطابق چلائی جاتی ہے۔

انہو ں نے مزید کہا کہ 7 دسمبر کو تلنگانا میں لیا جانے والا فیصلہ ریاست کے عوام کوایک سنہرا موقع فراہم کرے گا جب وہ برسراقتدار پارٹی کے ذریعہ لگاتار پیمانے پر برتی جانے والی ذات پات پر مبنی سیاست کو رد کر سکیں گے۔

وزیر اعظم مودی نے بعد ازاں کانگریس کے رہنما کو اس طرح کا دعویٰ کرنے کے لئے نشانہ تنقید بنایا کہ ٹی آر ایس تلنگانا میں بی جے پی کی ٹیم بی ہے۔ انہوں نے ہر کس و ناکس سے کہا کہ وہ اس بات کو یاد کریں کہ کس طریقے سے اسی نامدار نے جے ڈی (ایس) کے لئے بھی یہی بات کہی تھی اور اسے کرناٹک انتخاب کے دوران بی جے پی کی بی ٹیم بتایا تھا۔ تاہم اس وقت کانگریس اور جے ڈی (ایس) دونوں نے پہلی فرصت میں کرناٹک میں حکومت سازی کے لئے ہاتھ ملا لیا تھا۔ ’’حقیقت یہ ہے کہ ٹی آر ایس اور کانگریس ایک ہی سکے کے دو پہلو ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ وہ اپنی ہی اے اور بی ٹیمیں ہیں۔ ‘‘

اس ریلی میں وزیر اعظم مودی نے مرکزی حکومت کی متعدد پہل قدمیوں کا بھی ذکر کیا جن میں آیوشمان بھارت یوجنا اور پردھان منتری آواس یوجنا شامل تھیں جو ملک میں عوام کی زندگی بدلتی رہی ہیں۔ تاہم انہوں نے اس امر پر اظہار افسوس کیا کہ تلنگانا کی حکومت ان اقدامات کے نفاذ میں روڑے اٹکا رہی ہیں اور تلنگانا کے عوام ملک کا ایک حصہ ہونے کے باوجود، حکومت کی بہبودی اسکیموں سے مستفید ہونے سے محروم ہیں۔

اس کے نتیجے میں،انہوں نے تلنگانا میں حمایتیوں سے کہا کہ ریاست میں واحد جمہوری پارٹی بی جے پی کے حق میں بڑی تعداد میں ووٹ دیں اور انہوں نے عوام کو یقین دلایا کہ وہ تلنگانا کو اسی طرح سے یکسر بدل دیں گے جیسے انہوں نے اور ان کی حکومت نے ملک کو بدل دیا ہے۔

 

'من کی بات ' کے لئے اپنے مشوروں سے نوازیں.
20 تصاویر سیوا اور سمرپن کے 20 برسوں کو بیاں کر رہی ہیں۔
Explore More
It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi

Popular Speeches

It is now time to leave the 'Chalta Hai' attitude & think of 'Badal Sakta Hai': PM Modi
100 cr jabs a symbol of India’s potential, will boost economy: PM

Media Coverage

100 cr jabs a symbol of India’s potential, will boost economy: PM
...

Nm on the go

Always be the first to hear from the PM. Get the App Now!
...
سوشل میڈیا کارنر،22 اکتوبر 2021
October 22, 2021
Share
 
Comments

A proud moment for Indian citizens as the world hails India on crossing 100 crore doses in COVID-19 vaccination

Good governance of the Modi Govt gets praise from citizens